سفارشی کلچر نے قومی کرکٹ تبا ہ کر دی : قومی کرکٹ ہیرو عبدالقادر

مورخہ: 05 مئی 2016ء

منہاج یونیورسٹی کے زیراہتمام کھیلوں کے سالانہ مقابلوں کی اختتامی تقریب سے خطاب
یونیورسٹی آمد پر وائس چانسلر ڈاکٹر محمد اسلم غوری اور خرم نواز گنڈاپور نے شکریہ ادا کیا، کھلاڑیوں میں انعات تقسیم کیے

لاہور (5 مئی 2016) منہاج یونیورسٹی لاہور کے زیر اہتمام کھیلوں کے سالانہ مقابلوں کی اختتامی تقریب کے مہمان خصوصی قومی کرکٹ ہیرو عبدالقادر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سفارشی کلچر نے کرکٹ سمیت قومی کھیلوں کے انفراسٹرکچر کو تباہ و برباد کر دیا۔ نجم سیٹھی جیسے سفارشی ہر شعبے میں سفارشی ملازمین بھرتی کرتے ہیں۔ سپریم کورٹ کے ایک جج کے فیصلے میں متعدد کرکٹرز کو داغی قرار دیا گیا ہے۔ اس فیصلے کو سامنے رکھتے ہوئے ایسے تمام کرکٹرز کو کرکٹ بورڈ سے دور رکھا جائے۔ کوچنگ کیلئے مقامی کھلاڑی ہونا چاہیے غیر ملکی کھلاڑیوں کی کسی اور ملک میں کوچنگ پر پابندی کا قانون پاس ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ غیر ملکی کوچ ہی اگر منگوانا ہی ہے تو پھر ویسٹ انڈیز کے عظیم بلے باز ووین رچرڈ کو بلایا جائے جو پاکستان میں خدمت انجام دینے کیلئے رضا مند بھی ہیں۔ یونیورسٹیز کے اندر کرکٹ پر توجہ دے کر پڑھے لکھے کرکٹرز پیدا کیے جا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انضمام الحق کو بھی سوچ سمجھ کر کوئی عہدہ قبول کرنا چاہیے۔ میرے سمیت بہت سے سینئر کرکٹرز اس کرکٹ بورڈ کے سفارشی کلچر میں کام کرنے سے تائب ہو چکے ہیں۔

تقریب سے وائس چانسلر ڈاکٹر محمد اسلم غوری، خرم نواز گنڈاپور، سجاد العزیز، اقبال مرتضیٰ نے خطاب کیا۔ سالانہ کھیلوں کے مقابلوں میں کرکٹ، فٹبال، والی بال، بیڈمنٹن، کراٹے، ٹیبل ٹینس اور بیس بال کے کھیل شامل تھے۔ مہمانان خصوصی نے اول، دوئم، سوئم پوزیشن حاصل کرنے والی ٹیموں اور کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کیے۔

عبدالقادر نے بہترین تعلیمی ماحول دینے اور سپورٹس سرگرمیوں پر توجہ دینے پر منہاج یونیورسٹی کی انتظامیہ بالخصوص بورڈ آف گورنر ز کے چیئرمین ڈاکٹر محمد طاہرالقادری اور ڈاکٹر حسن محی الدین کو زبردست خراج تحسین پیش کیا۔ انہوں نے کہا کہ جدید اور معیاری تعلیم کی فراہمی میں کردار ادا کرنے والے اس ملک اور قوم کے محسن ہیں۔ انہوں نے کہا کہ منہاج یونیورسٹی کے نوجوانوں کا سپورٹس میں ٹیلنٹ اور جوش و خروش دیکھتے ہوئے میں کرکٹ کی کھلاڑیوں کی کوچنگ اور ٹریننگ کیلئے تیار ہوں۔ انہوں نے کہا کہ فضل محمود، حنیف محمد جیسے عظیم کرکٹر کو ضائع کر دیاگیا۔ ظہیر عباس کو عہدہ دے کر مصروف کرنے کی بجائے اس سے کرکٹ سیکھی جائے۔ پاکستان کو کھیلوں کے حوالے سے اس کا کھویا ہوا شاندار ماضی واپس دلانے کیلئے ہر قومی کرکٹر اور کھلاڑی کو اپنا کردار ادا کرنا ہو گا۔

منہاج القرآن کے ناظم اعلیٰ خرم نواز گنڈاپور نے عبدالقادر کو منہاج یونیورسٹی میں خوش آمدید کہا اور مقابلوں میں اول، دوئم، سوئم پوزیشنیں حاصل کرنے والوں کو مبارکباد دی۔

بعدازاں قومی کرکٹ ہیرو عبدالقادر نے منہاج ویلفیئر کے زیر اہتمام چلنے والے ادارے آغوش کا دورہ بھی کیا اور یتیم بچوں کے معیاری تعلیم و تربیت پر انہوں نے منہاج ویلفیئر انتظامیہ اور ڈاکٹر محمد طاہرالقادری کو مبارکباد دی۔ انہوں نے کہا کہ اصل دین اور سیاست خدمت خلق کا نام ہے۔

تبصرہ

تلاش

ویڈیو

Minhaj TV
Quran Reading Pen
We Want to CHANGE the Worst System of Pakistan
Presentation MQI websites
Advertise Here
Top